ہردلعزیز اداکارہ اور ماڈل پراسرار طور پر جل کر ہلاک

میکسیکو سٹی( نیوز ڈیسک ) میکسیکو کی 2015 میں بیوٹی کوئن رہنے والی خواجہ سرا ماڈل پالیٹ گونزالیز کو نسلی تعصب کا نشانہ بناتے ہوئے جلانے کے بعد ہلاک کردیا گیا۔غیرملکی میڈیا کے مطابق ماڈل پالیٹ گونزالیز نے گزشتہ کچھ عرصے سے شوبز کی دنیا سے کنارہ کشی اختیار کرتے ہوئے گوشہ گمنامی کی زندگی گزارنا شروع کردی تھی جس پر ان کے اہلخانہ اور دوستوں نے سوشل میڈیا پر ان کی تلاش کے لئے مہم بھی چلائی تاہم ان کی جلی ہوئی لاش میکسیکو کے شہر سیلایا سے ملی۔ ڈی این اے رپورٹ میں لاش کی شناخت ماڈل پالیٹ گونزالیز سے ہوئی جن کی موت بری طرح جلنے سے واقع ہوئی۔دوسری جانب خواجہ سراؤں کے حقوق کی تنظمیم کی صدر مارا جاؤ سینچیز نے دعویٰ کیا ہے کہ پالیٹ کو بدترین تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد جلایا گیا ہے تاکہ اس کی لاش کی شناخت نہ ہوسکے جب کہ اس طرح کی بربریت خواجہ سراؤں کی کمیونٹی سے نفرت کا اظہار ثابت کرتا ہے۔بربریت خواجہ سراؤں کی کمیونٹی سے نفرت کا اظہار ثابت کرتا ہے(اس خبر یا مواد سے ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں !تمام خبریں اور مواد مروجہ ذرائع سے حاصل کیاگیاہے)




اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

ویڈیو

بزنس

پول