ایشیا میں سب سے زیادہ پانی کس شہر کے لوگ استعمال کرتے ہیں ، ناقابل یقین خبر آگئی

لاہور( نیوز ڈیسک)صوبائی دارلحکومت میں پانی کی زیرزمین سطح سالانہ ایک میٹر تک گرنے سے لاہور کے تیس علاقوں میں پانی کی شدید قلت پیدا ہوگئی۔ شہرمیں پیداہونیوالی سنگین صورتحال کیخلاف شہری بھی سڑکوں پر نکل آئے۔لاہورمیں موسم گرما عروج پر ہے،اس لیے پانی کے استعمال میں اضافہ بھی یقینی ہے واسازرایع کے مطابق لاہور کے 30 علاقوں پانی زیر زمین مزید نچے جانیکی وجہ سے پانی کی قلت کا سامنا ہے جن میں،اقبال ٹاوئن، ٹاوٴن شپ،گرین ٹاون اور باگڑیاں سمیت علاقے شامل ہیں۔گزشتہ روز لاہور کے مختلف علاقوں میں پانی کی شدید قلت کے باعث شہریوں نے احتجاجی مظاہرے بھی کیے، شہریوں کا کہنا ہے کہ پانی کی قلت کے باعث معمولات زندگی بری طرح متاثر ہورہے ہیں۔واسا حکام کہتے ہیں کہ پانی کی قلت موسم گرما میں اِس کی طلب ورسد میں فرق کے باعث پیدا ہوئی تاہم پانی کی قلت کو پورا کرنے کے لیے نئے ٹیوب ویلز اور جنریٹرز لگائے جا رہے ہیں۔ماہرین کیمطابق لاہورمیں زیر زمین پانی سالانہ ایک میٹر تک کم ہورہا ہے جبکہ ایشیا میں لاہور سب سے زیادہ پانی استعمال کرنے والا شہر بن چکا ہے، ایسی صورتحال رہی تو مستقبل میں لاہوریوں کو پانی کی قلت کا سنگین مسئلہ لاحق ہوسکتا ہے۔لاہوریوں کو پانی کی قلت سے بچانے کے لیے ہنگامی بنیادوں پراقدامات کرنے کے ساتھ شہریوں کوبھی پانی کے ضیاع پرقابو پانے کی ضرورت ہے۔




اس وقت سب سے زیادہ مقبول خبریں
تازہ ترین خبریں

ویڈیو

بزنس

پول