دل کا دورہ پڑنے کی چند خاموش علامتیں

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)ہارٹ اٹیک ایک ایسا نام جس سے ہر انسان خوفزدہ رہتا ہے ایک نئے طبی جائزے کے ذریعے اس کی اہم وجہ سامنے آگئی ہے اگرڈاکٹر دماغ تک خون پہنچانے والی شریان کے قریب اسٹیتھو اسکوپ رکھے اور اگر اس شریان سے خلافِ معمول تیز شور کی آواز سنائی دے تو ایسا انسان مبینہ طور پر ہارٹ اٹیک یا فالج کے اٹیک کا شکار ہوسکتا ہے۔شریان کے قریب محسوس ہونے والی یہ شوریدہ آواز ”بروٹ کیروٹڈ “ کہلاتی ہےاور یہ شور اس وقت پیدا ہوتا ہے جب دماغ کے سامنے اور وسطی حصے کو خون پہچانے والی دونوں شریانوں میں سے کسی ایک کی اندرونی دیوار میں چربیلے مادے جمع ہوجائیں ان مادوں کے جمع ہونے کی وجہ سے خون کا بہاؤ پرسکون نہیں رہتا اور خون گزرتا ہوا شور مچانا شروع کردیتا ہے۔عام طور پر یہ صورتحال فالج کے خطرے کی علامت سمجھی جاتی ہے لیکن اب نئے جائزوں کی روشنی میں یہ بتایا گیا ہے کہ جن لوگوں کی شریانوں میں شور مچتا ہے ان میں ہارٹ اٹیک کا بھی دوگنا خطرہ رہتا ہے اور ایساشخص دل کی بیماریوں کی وجہ سے ہلاک بھی ہوسکتا ہے

Facebook Comments

مزید

ناخنوں پر آدھے چاند کا بنا ہونا کس چیز کی علامت ہے؟
ڈپریشن میں مبتلا افراد سے متعلق سنسنی خیز رپورٹ
پھل اور سبزیاں امراض قلب کے خلاف زیادہ موثر
ڈپریشن کا علاج دوائوں کی بجائے غذا سے کیجئے
اسپرین عمر بڑھانے میں مدد کرے
خودکشی سے روکنے والی دوا کی تیاری میں اہم پیش رفت