راحیل شریف صرف ایک ہی صورت میں اسلامی فوج کے سربراہ بن سکتے ہیں، سابق جرنل کا حیران کن انکشاف

راحیل شریف صرف ایک ہی صورت میں اسلامی فوج کے سربراہ بن سکتے ہیں، سابق جرنل کا حیران کن انکشاف

اسلام آباد(نیوزڈیسک) پاک فوج کے سابق جرنیل امجد شعیب نے 39 اسلامی ممالک کے فوجی اتحاد سے متعلق اہم بیان دیا ہے اور کہا ہے کہ مارچ یا اپریل میں سعودی عرب کی جانب سے پاکستان کو اس اتحاد کا حصہ بننے کی دعوت دی جائے گی، ضابطہ کار کے تحت یہ تجویز پارلیمنٹ میں پیش کی یا کسی اور طریقے سے اس اتحاد کا بننے کا فیصلہ کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ اگر حکومت پاکستان اس اتحاد کا حصہ بننے کا فیصلہ کرے گی تب ہی سابق آرمی چیف راحیل شریف اس اتحاد کے سربراہ بن سکتے ہیں بصورت دیگر نہیں۔انہوں نے اس بات کی تصدیق کی کہ راحیل شریف کی تعیناتی جی ایچ کیو کی اجازت سے مشروط ہے اور کہا کہ راحیل شریف کو فوجی اتحاد کا سربراہ بنائے جانے کی کلیئرنس جنرل ہیڈ کوارٹرز(جی ایچ کیو) سے لی جائے گی۔امجد شعیب نے کہا کہ فوجی اتحاد کے فیصلے صرف سعودی عرب نہیں کرے گا قونصل میں تمام اتحادی ممالک کے وزیر دفاع شامل ہوں گے کہ اس اتحاد میں کون کس عہدے پر کام کرے گا۔دو روز قبل ازیں امجد شعیب نے بتایا تھا کہ راحیل شریف نے فوجی اتحاد کا سربراہ بننے کے لیے تین شرائط پر ہامی بھری۔

سورس: اے آر وائی نیوز
شئیر کریں

Facebook Comments

مزید

80ہزار نوکریاں ، پاکستانیوں کیلئے بڑی خوشخبری آگئی
یا اللہ خیر!! تعلیمی ادارے اورمعصوم طلبہ دہشتگردوں کے نشانے پر،دھماکہ ہو گیا
بیرونِ ملک جانے کے خواہشمند ہو جائیں تیار!!اہم ترین ملک نے ایک لاکھ ویزوں کا اعلان کر دیا
شیخ رشید نے عمران خان کو تیسری شادی بارے کیا مشورہ دیدیا؟
سرکاری ملازمین کیلئے بڑی خوشخبر ی آگئی
بھارت کا ایک اور الزام پاکستان نے دعویٰ مسترد کر دیا