اب موجیں ہی موجیں!گوادر میں سرمایہ کاری کرنیوالوں کیلئے بڑی خبر آگئی

کراچی( نیوز ڈیسک ) چائنا اوورسیز پورٹ ہولڈنگ کمپنی( سی او پی ایچ سی) کے وائس جنرل منیجر پیٹر ہو نے کہاہے کہ گوادر بندرگاہ میں 2260ایکٹر رقبے پر مشتمل فری زون بنایا جارہاہے۔ ابتدائی فری زون جو 80ایکٹر زمین پر محیط ہے چین کی کمپنیوں نے حاصل کر لی ہے جو مچھلیوں کی پروسیسنگ،ماربل کی کٹنگ، پیٹروکیمیکلز سمیت دیگر کاروبار کے لیے مختص کی گئی ہے۔یہ بات انہوں نے انڈینٹرز ایسوسی ایشن آف پاکستان(آئی اے او پی) کے سابق چیئرمین اوربزنس مین پینل کی ایف بی آر لائژن کمیٹی کے چیئرمین فیاض مگوں کی سربراہی میں گوادر بندرگاہ کا دورہ کرنے والے وفدکے ساتھ اجلاس سے خطاب میں کہی۔وفد میں گودادر بندرگاہ اور فری زون میں سرمایہ کاری کرنے والے چین کے سرمایہ کار بھی شامل تھے۔ چائنا اوورسیز پورٹ ہولڈنگ کمپنی کے وائس جنرل منیجر پیٹر ہو نے اجلاس کے شرکاء کو بتایاکہ گوادر فری زون23سال کے عرصے تک مکمل طور پر ٹیکس فری ہوگا جبکہ سرمایہ کاروں کو زمین 99سال کی لیز پر دی جائے گینیز ایسٹ بے ایکسپریس وے،گوادر سے ملک بھر کے لیے روڈ نیٹ کی تعمیر،300میگا واٹ پاور پلانٹ، تازہ پانی کا ٹریٹمنٹ پلانٹ،ایل این جی ٹرمینل و پائپ لائن، پاک چائنا ٹیکنیکل ووکیشنل انسٹی ٹیوٹ، بزنس سینٹرز اور عالمی معیار کا نمائش سینٹر اس میگا پروجیکٹ کو اسٹیٹ آف دی آرٹ بنا دے گا۔اجلاس کے دوران انڈینٹرز ایسوسی ایشن آف پاکستان(آئی اے پی) کے سابق چیئرمین ا وربزنس مین پینل کی ایف بی آر کی لائژن کمیٹی کے چیئرمین سابق فیاض مگوں نے کہاکہ چائنا اوورسیز پورٹ ہولڈنگ کمپنی لمیٹڈ( سی او پی ایچ سی) کو اس میگا منصوبے سے فوائد حاصل کر نے اور پاکستان کی اقتصادی ترقی میں بھرپور کردار ادا کرنے کے لیے زیادہ سے زیادہ پاکستانی سرمایہ کاروں کو راغب کرنے کی جانب توجہ دے۔پاکستانی برآمدکنندگان کو بھی گوادر فری زون میں زمین حاصل کرنی چاہیے۔ انہوں نے چائنا پاکستان اقتصادی راہداری ( سی پیک ) منصوبے کے حوالے سے سیکورٹی انتظامات پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ سیکورٹی فورسز نے گوادر کو حفاظتی لحاظ سے محفوط بنا کر سی پیک منصوبے کو کامیاب سے ہمکنار کرنے کے لیے تمام تر توجہ مرکوز کی ہوئی ہے جس سے غیر ملکی سرمایہ کار بلاخوف و خطر پاکستان میں سرمایہ کاری کی جانب راغب ہوں گے۔آئی اے او پی کے وفد نے گوادر بندرگاہ کے ڈائریکٹرجنرل عبدالرزاق درانی سے بھی ملاقات کی جنہوں نے اس میگا پروجیکٹ کے بارے میں مفصل بریفنگ دی۔اس موقع پر ثاقب فیاض مگوں نے کہاکہ گوادر میگا پروجیکٹ کی پالیسیاں وضع کرتے وقت حکومت کو پاکستان بھر کے اسٹیک ہولڈرز، صنعتکاروں اور سرمایہ کاروں کی باہمی مشاورت سے اُن کے مفادات کا ضرور خیال رکھنا چاہیے ۔انہوں نے گوادر میگا پروجیکٹ کو ایک بڑی کامیابی قرار دیتے ہوئے کہاکہ پاکستان کے معاشی مرکز میں واقع یہ منصوبہ پاک چائنا دوستی کا بہترین نمونہ ہے۔انہوں نے کہا کہ پاک آرمی کے محفوظ پاکستان کے عزم کی وجہ سے دشمن کی تمام تر منفی کوششیں اور ناپاک عزائم ناکام ہو چکے ہیں۔ پاک آرمی فول پروف سیکیورٹی فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ گوادر میگا پروجیکٹ کے ہر پہلو پر گہری نظر رکھے ہوئے ہے تاکہ اس منصوبے کو سرمایہ کاری کے لیے محفوظ تر بنایا جاسکے۔

Facebook Comments

مزید

طیارہ تباہ ہونے سےقبل پائلٹ نے کیاکہا؟ اصل خبر تواب آئی اسلام آباد(نیوز ڈیسک )سانحہ پی آئی اے ، واضح رہے کہ طیارہ گرنے سے کچھ دیر قبل پائلٹ نے آخر ی پیغام دیا جس میںپائلٹ نے واضح کہہ دیا تھا کہ طیارے کے انجن میں خرابی پیدا ہوگئی ہے جس کی وجہ سے طیارہ گر کر تباہ ہوگئی ہے۔ طیارے کا اسلام آباد پہنچنے سے کچھ دیر قبل کنٹرول ٹاور کے ریڈار سے رابطہ منقطع ہوگیا اور وہ ریڈار سے غائب ہوگیا۔چترال تا اسلام آباد پرواز کرنے والے پی آئی اے کے اے ٹی آر طیارے میں 47افراد سوار تھے،پی آئی اے طیارہ فلائٹ نمبر پی کے 116ایبٹ آباد کے قریب ساڑھے 4بجے لاپتہ ہوا ہے،جس کی تلاش اب گرائونڈ پر کی جارہی ہے۔دوسری جانب حویلیاں آرڈیننس فیکٹری کے قریب پہاڑی علاقےمیں مقامی افراد نے ایک طیارہ گرتے ہوئے دیکھا ہے جس کے بارے میں یہی خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ یہ پی آئی اے کی بدقسمت فلائٹ پی کے 116ہی ہے ۔طیارہ گرنے کے مقام سے دھواں اٹھ رہا ہے جو دور دور تک دیکھا جارہا ہے
پاناما کیس بارےپی ٹی آئی کا اب تک کا بڑا یوٹرن، حکومت کی بات مان لی
کراچی کے بعد پاکستانیوں کیلئے ایک اور افسوسناک خبر ! خوفناک حادثہ 5افرا د قتل
ترک صدر کے اعلان نے بھارت کے ارمانوں پر پانی پھیر دیا
شادی کے گھر ماتم !باراتیوں کی بس الٹ گئی ، جانی نقصان ہوگیا
راحیل شریف کیخلاف خبر چلانا نجی چینل کو مہنگا پڑ گیا، مقدمہ درج